مولانا ارشد مدنی نے دیا پانچ دن کا وقت، کہا نہیں لیا گیا مثبت فیصلہ تو اٹھایا جائے گا اگلا قدم۔

3
1997

تبلیغی جماعت کے متعلق سعودی عرب کے حالیہ موقف پر مولانا ارشد مدنی نے دیا پانچ دن کا وقت، کہا نہیں لیا گیا مثبت فیصلہ تو اٹھایا جائے گا اگلا قدم۔

نئی دہلی :(آرکےبیورو ) جمعیۃ علماء ہند کے صدر مولانا سید ارشد مدنی نے کہا ہے کہ انہوں نے سعودی حکومت کو تبلیغی جماعت سے متعلق اپنی گزارشات پر عمل کے لیے

پانچ دنوں کا وقت دیا ہے۔ اس تعلق سے سعودی عرب کے ایم او آئی اے کو ایک خط بھیجا ہے، جس میں تبلیغی جماعت کے خلاف الزامات کو مسترد کیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ مولانا نے یہ خط ہندوستان میں سعودی سفیر ڈاکٹر سعود بن محمد الساطی کو منگل کے روز ملاقات کے دوران ذاتی طور پر حوالے کیا تھا۔
بدھ کو فون پر انگریزی نیوز پورٹل ’انڈیا ٹومارو ‘ سے بات کرتے ہوئے مولانا مدنی نے خط کا صحیح مواد بتانے سے انکار کر دیا۔ تاہم ان کا کہنا تھا کہ انھوں نے سعودی حکومت کو اپنے میسیج پر عمل کرنے کے لیے پانچ دن کا وقت دیا ہے۔

انہوں نے ٹیلی فونک گفتگو کے دوران

مزید بتایا کہ اگر میرے خط پر تسلی بخش کارروائی نہ کی گئی تو میں پانچ دن بعد میڈیا سے بات کروں گا۔ تاہم ان کا کہنا تھا کہ سعودی سفیر نے یقین دہانی کرائی ہے کہ نتیجہ مثبت نکلے گا۔

قابل ذکر ہے کہ سعودی حکومت نے تبلیغی جماعت کی سرگرمیوں پر پابندی کے ساتھ اماموں کو جمعہ کے خطبات میں اس سے متعلق عوام کو آگہی دینے کی بھی

ہدایت دی تھی بہت سی دوسری چیزوں کے علاوہ، خطبہ میں سعودی عوام سے کہا کہ وہ تبلیغی جماعت اور اس کی سرگرمیوں سے وابستہ نہ ہوں ،کیونکہ اس تنظیم کا عقیدہ اور عمل جس کی ابتدا ہندوستان میں ہوئی ہے، قرآن و حدیث کی صحیح تعلیمات کے مطابق نہیں ہے، تبلیغی جماعت کو دہشت گردی کا دروازہ بھی بتایا گیا۔ سعودی حکومت کے فیصلہ کا مسلم عوام پر شدید ردعمل ہوا ہے۔

Previous articleپارلیمنٹ میں بولنے نہیں دیا جا رہا ہے:راہل
Next articleOmicron: اومی کرون ویرینٹ ہوجائے تو کیسے محسوس ہوتا ہے؟ کیا ہیں اس کی علامات؟

3 COMMENTS

  1. Beshak sahi kaha hai Maulana ne agar saudi arab nee Maulana ki bat nahi Mani to hum Dell hi me saudi safeer k office k samne dharna denge

  2. Maulana ne jo kaha wo sahi hai jis trah Maulana ne kaha hai waisa Saudi hukumat Saudi safeer k office k samne hum dharna dengenahi Suni to hum Dell hi me saudi

اپنے خیالات کا اظہار کریں

Please enter your comment!
Please enter your name here