بہار اسٹیٹ مدرسہ ایجوکیشن بورڈ کے چیئرمین کے متعلق اہم فیصلہ!

0
476

پٹنہ: بہار اسٹیٹ مدرسہ ایجوکیشن بورڈ کے چیئرمین 70 سال سے زائد عمر والے نہیں ہوں گے ۔ کوئی بھی شخص دو میعاد سے زیادہ چیئرمین کے عہدے کا اہل نہیں ہوگا۔نیا دستورالعمل میں بورڈ کے چیئرمین تک کے عمل، ان کے اختیارات اور دیگر ذمہ داریوں کو واضح کر دیا گیا ہے ۔دستور العمل میں چیئرمین اور سیکرٹری کے ساتھ ساتھ کنٹرولر آف امتحانات کے اختیارات بھی طے کیے گئے ہیں

چیئرمین کی میعاد عہدہ سنبھالنے کی تاریخ سے تین سال کے لیے ہوگی، لیکن اگر وہ اس مدت میں بدانتظامی کے مرتکب پائے جاتے ہیں تو ریاستی حکومت انہیں درمیان میں ہی ہٹا سکتی ہے۔

مدارس کو الحاق دینا اور واپس لینے کا اختیار بھی بہار اسٹیٹ مدرسہ ایجوکیشن بورڈ کو دیا گیا ہے۔ اس کے ساتھ ہی بہار اسٹیٹ مدرسہ ایجوکیشن بورڈ میں تیسرے درجے کے ملازمین کی تقرری بہار اسٹیٹ اسٹاف سلیکشن کمیشن سے کی جائے گی۔

چوتھے درجے میں بنائی گئی آسامیوں پر آؤٹ سورسنگ کے ذریعے خدمات لی جائیں گی۔ یہ تمام قواعد بہار اسٹیٹ مدرسہ ایجوکیشن بورڈ رولز 2022 میں بنائے گئے ہیں۔ اس حوالے سے محکمہ تعلیم کی جانب سے نوٹیفکیشن حالیہ دنوں میں جاری کر دیا گیا ہے۔

کسی بھی شخص کو چیئرمین کے طور پر تقرری کے لیے موزوں نہیں سمجھا جائے گا جب تک کہ اس کے پاس مرکزی یا ریاستی حکومت کے تحت اس کے پاس طویل عرصے کا انتظامی تجربہ نہ ہو۔ یا پوسٹ گریجویٹ سطح تک تعلیم فراہم کرنے والے تعلیمی ادارے میں کم از کم دس سال کا تدریسی یا تحقیقی تجربہ نہ ہو، یا جو عربی، فارسی، اسلامیات میں مہارت نہ رکھتا ہو اور مدرسہ کی تعلیم میں دلچسپی نہ رکھتا ہو۔

Previous articleغالب کا “سلام”
Next articleایک خاتون کی شکایت _____ ‘ازواج’ کا ترجمہ ‘بیویاں’ کیوں؟

اپنے خیالات کا اظہار کریں

Please enter your comment!
Please enter your name here