LATEST ARTICLES

ایک مذاکرہ کے بہانے (آخری قسط) از:اشعرنجمی

0
پروفیسر نجمہ رحمانی دہلی یونیورسٹی کے شعبہ اردو سے وابستہ ہیں ، آپ کی نظر نہ صرف اردو ادب پر بلکہ ہندوستان کی دیگر زبانوں کے ادب کے ساتھ عالمی ادب...

نئے امکانات پر دستک دیتا گرم سیر: عظیم انصاری از: عالیہ خان

0
پٹنہ، بہار غیر ضروری فارسی زدگی سے مقدور بھر فاصلہ بندی اختیار کئے ہوئے سادہ، سہج، سلیس اور سرل زبان میں اپنے عہد کی شدتوں اور شفقتوں کا درد مندانہ بیان کرنے...

شہرِ ظلمت میں روشنی کا سفیر: پریم ناتھ بسملؔ از: کامران غنی صباؔ

0
شعبۂ اردو نتیشور کالج، مظفرپور اردو محبت کی زبان ہے۔ اردو خیر سگالی کی زبان ہے۔ اردو گنگا جمنی تہذیب کی علامت ہے۔زبان مذہب اور سرحد کی قید سے آزاد ہوتی...

ناول : رُوحانیت سے رومانیت تک از:خورشید حیات

0
رُومانیت . کُشادہ فضا ، وسیع اطراف و اکناف اور خلاء کی اُن وسعتوں کا نام ہے جہاں رُوحانی لہریں تہہ بہ تہہ ، ہوا اور تیز آندھی کو اپنی پُشت...

دینی اور عصری علوم سے ہی دنیاوی اور اخروی کامیابی ممکن  تسخیر فاؤنڈیشن کے...

0
نئی دہلی/ہریانہ (پریس ریلیز) ہماری کامیابی دینی اور عصری علوم میں چھپی ہوئی ہے۔اس لیے ہمیں جہاں دینی علوم حاصل کرنا چاہیے، وہیں عصری علوم بھی سیکھنا چاہیے۔ کیوں کہ اس کے...

کشن گنج ڈائری از: خالد مبشر

2
26 جولائی 2021 کشن گنج سے روٹانکلتے وقت شمیم ندوی کو فون کردیا تھا کہ ہم ڈاکٹر ظریف احمد صاحب اور انجینئر منصور عالم علیگ صاحب کے ساتھ دو گھنٹے میں آپ...

مولانا محمد اظہار الحق قاسمی بھی چلے گئے از: مفتی محمد ثناء الہدیٰ...

0
نائب ناظم امارت شرعیہ بہار اڈیشہ و جھارکھنڈ قاسمی ٹرسٹ ،ابناء قدیم جامعہ عربیہ اشرف العلوم کنہواں کے صدر اسلام اور معیشت کے مصنف ، نوجوان عالم دین مولانا محمداظہار الحق قاسمی...

بہت دیر کردی مہرباں فیصلہ لیتے لیتے از: قمر اعظم صدیقی

0
بھیرو پور، حاجی پور، ویشالی، بہار 9167679924 امارت کے سلسلے میں کہاں سے شروع کروں کہاں پہ ختم ، کس موضوع پہ گفتگو کروں اور کسے چھوڑ دوں...

مسجد نبوی کے خطاط کی زندگی ،ایک کہانی ایک سبق از:تحریر: توقیر بُھملہ

0
دروازے پر زور زور سے دستک ہوئی، بوڑھے شخص نے دروازہ کھولا تو ہمسائے اور اہل محلہ سارے اکٹھے تھے، تیور تو غصے والے تھے جنہیں دیکھ کر گھر سے برآمد...

انشائیہ ”موڈ” از : جہانگیر انس (سیوان)

0
ہوایوں کہ میں اور میرا ہم پیشہ دوست مختصر وقفے سے اپنے سینیئرکے پاس ٹرانسفر کی درخواست لے کر حاـضر ہوئے۔ سینیر نے مجھے لال جھنڈی دکھاکر میرے بڑھتے ہو ئے...